تبلیغی جماعت کے 5 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق 40

تبلیغی جماعت کے 5 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق

اسلام آباد کے علاقہ بارہ کہو کو سیل کر دیا گیا جس کے بعدضلعی انتظامیہ مزید لوگوں کے ٹیسٹ کر رہی ہے
دنیا بھر میں تباہی مچانے کے بعد کورونا وائرس نے اب پاکستا ن میں اپنے قدم جما لئے ہیں۔ پاکستان میں ابھی تک کوروناوائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد800سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ 6 افراد اس کی وجہ سے جان کی بازی ہار گئے ہیں۔ ہر گزرتے دن کے ساتھ کورونا وائرس کے مریضوں میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ اسی دوران اطلاعات موصول ہوئی ہیں جس کے مطابق اسلام آباد سے تعلق رکھنے والے تبلیغی جماعت کے 5 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہو ئی ہے۔
اردونیوزکی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد کے علاقہ کہو کو سیل کر دیا گیا ہے جبکہ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے مزید لوگوں کے کورونا ٹیسٹ کروائے جا رہے ہیں۔مزید بتایا گیا ہے کہ بارہ کہو کی ایک مقامی مسجد میں ایک شخص میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی تھی جس کے بعد وہاں موجود تمام افراد کو مسجد کے اندر ہی رکھا گیا تھا، ان سب کے ٹیسٹ کئے گئے ہیں جس کے بعد مزید 5 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہو گئی ہے۔
ملک میں بڑھتے ہوئے کورونا وائرس کے خطرات کی وجہ سے سندھ حکومت نے گزشتہ روز صوبے بھر میں مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا جس کے بعد آج سے لاک ڈاون پر عمل کیا جا رہا ہے جبکہ پنجاب اور خیبرپختونخواہ حکومت کی جانب سے فوج کو امدادی کارروائی کے لئے طلب کر لیا گیا ہے۔ حکومت کی جانب سے بھی عوام سے اپیل کی جا رہی ہے کہ وہ گھروں میں رہیں اور جس حد تک ممکن ہوایک دوسرے سے ملنے سے اجتناب کریں کیونکہ کورونا وائرس سے بچنے کا یہ ایک واحد راستہ ہے۔
پاکستان میں سب سے زیادہ متاثر ہونے والے افراد کا تعلق سندھ سے ہے اسی وجہ سے کراچی سمیت سندھ بھر میں 15 دن کا لاک ڈاؤن جاری ہے جس کے تحت تحت صوبے کے دفاتر، پبلک ٹرانسپورٹ اور شاپنگ مالز سمیت تمام عوامی مقامات بند ہیں۔ کھلنے والی دکانوں میں صرف میڈیکل اسٹور اور اشیاء خردونوش کی دکانیں شامل ہیں جبکہ وزیراعلیٰ سندھ کی جانب سے اعلان کیا گیا تھا کہ بجلی، پانی، کیبل،ٹیلی کام اور بینکنگ سروسزجاری رہیں گی تا کہ لوگوں کو اپنی زندگیاں گزارنے میں کسی قسم کی مشکلات کا سامنا نہ ہو۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں