حکومت پنجاب کا مری کو سیاحوں کیلئے بند کرنے کا فیصلہ 46

حکومت پنجاب کا مری کو سیاحوں کیلئے بند کرنے کا فیصلہ

پہلے سے موجود سیاحوں کو اپنے علاقے میں واپس جانے کی ہدایت ، مری کے رہائشی بھی نقل و حرکت محدود کر لیں ۔ انتظامیہ
حکومت پنجاب نے مری کو سیاحوں کیلئے بند کرنے کا فیصلہ کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے مری کو سیاحوں کیلئے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ حکام نے ہدایت جاری کی ہے کہ مقامی لوگوں بھی نقل ووحرکت محدود کر لیں ۔ غیر ضروری سرکاری ملازمین کو گھر رہنے کی ہدایا ت جاری کر دی گئیں ہیں۔
حکام کا کہنا ہے صرف ضروری سٹاف ہی دفاتر میں آئے ۔ مری میں موجود سیاحوں کو واپس اپنے علاقوں میں جانے کی ہدایت کی گئی ہے ۔ یہ بات بھی واضح رہے کہ ملک بھر میں تعلیمی ادارے بند کرنے کے بعد شہری مری کا رخ کر رہے تھے ۔ جس کے بعد حکومت نے نوٹس لیتے ہوئے مری کو سیاحت کیلئے بند کر دیا ہے۔ سرکاری ملازمین کو بھی ریلیف دیا ہے ۔
تاہم مری میں سیاحت بند ہونے سے کئی افراد کے بے روزگار ہونے کا خدشہ ہے ۔

واضح رہے ا س سے قبل سندھ حکومت نے سرکاری دفاتر بند کرنے کا اعلان کیا تھا ۔ سندھ حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ جمعرات کے روز سے صوبے بھر کے تمام سرکاری دفاتر بند رہیں گے۔ وزیرِ اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے متاثرہ افراد کے گھروں کے پتے لے کر انکے گھرو ں میں راشن پہنچانے کا بھی حکم دیا ہے۔ انہوں نے کے الیکٹرک کو مزید کہا ہے کہ وہ بجلی کی بلاتعطل فراہمی کا یقینی بنائے ۔
اس کے ساتھ سندھ حکومت نے شاپنگ مالز، ریسٹورنٹس اور سی ویو کو بند کرنے کا فیصلہ کرلیا ۔ سندھ حکومت نے اعلان کیا ہے کہ صوبہ بھر میں شاپنگ مالز، ریسٹورنٹس اور کراچی سی ویو بند کردیا گیا ہے۔ حکومت کی جانب سے بتایا جارہا کورونا وائرس کے خطرے کے پیشِ نظر یہ اقدامات اٹھائے جارہے ہیں، سبزی اور راشن کی دوکانیں، مچھلی منڈی اور کریانہ سٹور کھلے رہیں گے۔ سندھ حکومت نے انٹر سٹی بس سروس بھی بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ پارکس بھی بند کردیے گئے ہیں۔ سندھ حکومت نے کہا ہے کہ ہم لوگوں کو ان کے گھروں تک محدود کرنا چاہتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں