شبر زیدی جلد صحت یاب نہ ہوئے تو متبادل لانا پڑےگا 178

شبر زیدی جلد صحت یاب نہ ہوئے تو متبادل لانا پڑےگا

چیئرمین ایف بی آر واقعی بیمار ہیں ‘ صحت یابی کیلئے دعا گو ہوں : مشیر خزانہ ڈاکٹر حفیظ شیخ
مشیر خزانہ چیئر میں ایف بی آر کی تلاش میں ۔وزیرخزانہ ڈاکٹر حفیظ شیخ نے چیئرمیں ایف بی آر (فیڈرل بورڈ آف ریونیو ) شبر زیدی کے جلد صحت یاب نہ ہونے کی صورت متبادل شخص کو چیئرمین کی سیٹ پر لانے کا اشارہ دے دیا ہے۔ نجی ٹی وی کو انٹر ویو دیتے ہوئے مشیر خزانہ ڈاکٹر حفیظ شیخ نے کہا ہے کہ شبر زیدی کے جلد صحت یاب نہ ہونے پر متبادل لانا پڑے گا ۔
ان کا کہنا تھا کہ شبز زید واقعی بیمار ہیں ، میں ان کی صحت یابی کے لئے دعا گو ہوں۔ تاہم اگر وہ جلد صحت یاب نہ ہوئے تو متبادل لانا پڑےگا۔ یاد رہے چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی کی طبیعت اچانک ناساز ہوگئی تھی ۔ طبیعت ناسازی کے باعث چئیرمین ایف بی آر کے رخصت چلے گئے تھے۔
شبر زیدی کی غیر معینہ چھٹی عمران خان کے لیے دھچکا ثابت ہو سکتا ہے۔

اس حوالے سے معروف صحافی کامران خان کا کہنا تھا وزیراعظم عمران خان کے لئے یہ یقینا بڑا دھچکا ہے۔چئیرمین شبر زیدی وزیراعظم کی معاشی ٹیم کے اہم رکن تھے۔وہ کتنے عرصے تک غیر حاضر رہیں گے،اس بارے میں معلوم نہیں۔پچھلے چند ہفتوں سے وہ طبعیت خراب ہونے کی وجہ سے ایف بی آر میں وقت نہیں دے پا رہے۔ یہ مجموعی صورتحال وزیراعظم کے لیے انتہائی مشکل کا باعث بنے گی۔
شبر زیدی کپتان کی معاشی ٹیم کے ایک بہت اہم کھلاڑی تھے۔انہوں نے دو ہفتے کی چھٹیوں کے بعد 21 جنوری کو دوبارہ دفتر سنبھالا تھا مگر ان کی طبعیت نہیں سنبھل پائی اور پھر رخصت پر جانا پڑا۔اس وقت ایف بی آر ایک بڑے کٹھن مرحلہ میں ہے۔ٹیکس وصولیوں کے ٹارگٹ کو پورا کرنا ہے۔اس سال یہ بہت بڑا یعنی 5500 ارب کا ٹارگٹ تھا اور کہیں دور دور تک یہ ٹارگٹ پوتا ہونا نظر نہیں آ رہا۔ اس لحاظ سے آئی ایم ایف کے پروگرام کے تحت ہے۔آئندہ پیر کو آئی ایم ایف کا وفد پاکستان آ رہا ہے۔جہاں پاکستان کی دوسری سہ ماہی کے بارے میں جائزہ لیا جائے گا۔یہ مذاکرات بہت اہم ہو سکتے ہیں۔ تاہم اب وزیر خزانہ نے نئے چیئرمین ایف بی آرکے لائے جانے کا اشارہ دے دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں