ریلوے کے مسافروں کی تعداد ایک کروڑ تک بڑھ گئی ہے - وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید 180

ریلوے کے مسافروں کی تعداد ایک کروڑ تک بڑھ گئی ہے – وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید

پشاور – وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے بدھ کے روز کہا ہے کہ ریلوے کے شعبے میں بنیادی اصلاحات نے تنظیم کو اپنے پیروں پر کھڑا کردیا ہے ، جس سے مسافروں کی تعداد میں سالانہ 10 ملین ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔
رسالپور فیکٹری میں پانچ انجنوں کی اوور ہولنگ کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر ریلوے نے کہا کہ ریلوے عام لوگوں کے لئے سفر کرنے کا ایک طریقہ ہے اور اس نے ملک کی سماجی و معاشی ترقی میں مرکزی کردار ادا کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ریلوے سیکٹر کی ترقی کے لئے موثر اقدامات اٹھائے گئے ہیں جس سے اس شعبے کے لئے سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے اور اس کے نتیجے میں مسافروں کی تعداد میں بتدریج اضافہ ہوتا جارہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ریجن پور فیکٹری میں 180 مزید کوچ تیار کیے جائیں گے جو ریلوے کے شعبے کی ترقی کے لئے کوششوں کوحیرت بخشیں گے۔
انہوں نے کہا کہ اگرچہ ایم ایل ون منصوبے پر اسی پوزیشن پر آنے سے 14 سال قبل دستخط کیے گئے تھے اور جس دن دستخط ہوئے اس اسکیم پر کوئی پیشرفت نہیں ہوئی ہے۔
وزیر ریلوے نے کہا کہ ایم ایل ون منصوبے کے ٹینڈرز مارچ میں پیش کیے جائیں گے اور انہوں نے مزید کہا کہ اس سے ریلوے نظام کو تیز کرنے میں مدد ملے گی۔
انہوں نے کہا کہ عارضی طور پر ریلوے ملازمین کو مستقل کردیا جائے گا جب عدالت نے حکم امتناعی چھوڑنے کے بعد مستقل کردیا جائے گا ، اور شھدہ کے بیٹوں ، ریٹائرڈ ملازمین ، بیواؤں اور اقلیتی برادری کے لئے نئی بھرتی میں خصوصی کوٹہ مختص کیا جائے گا۔
انہوں نے کہا کہ اس وقت 69 انجن غیر فعال پڑے تھے اور انہوں نے مزید کہا کہ وہ مذہبی طور پر مسافروں کی خدمت کررہے ہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ کارکنان ریلوے کی ترقی میں اہم کردار ادا کر رہے ہیں اور انھیں ایک پیمانے پر ترقی دینے کا عزم کیا۔
انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان ملک کو درپیش چیلنجوں پر قابو پانے کے لئے ٹھوس اقدام اٹھا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نئی بھرتی کے عمل کے دوران 155 عارضی لیبر بھرتی کیے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کوکوئی خطرہ نہیں ہے۔
انہوں نے کہا کہ پوری دنیا میں بے گناہ کشمیریوں کے خلاف بھارتی افواج کے مظالم کو اجاگر کرنے کے لئے آواز اٹھانی چاہئے۔
انہوں نے اقوام متحدہ پر زور دیا کہ وہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کرے جس نے پورے خطے کو داؤ پر لگا دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں