بنگلہ دیش کی ٹیم پاکستان میں کھیلنے کیلئے تیار تھی لیکن لگتا ہے کہ بھارت نے دباؤ ڈالا ہے: شاہ محمود قریشی 177

بنگلہ دیش کی ٹیم پاکستان میں کھیلنے کیلئے تیار تھی لیکن لگتا ہے کہ بھارت نے دباؤ ڈالا ہے: شاہ محمود قریشی

سری لنکن کھلاڑیوں نے تاثر دیا کہ پاکستان میں ماحول سازگار تھا اور سری لنکن کرکٹرز نے سیکیورٹی انتظامات کی تعریف کی تھی لیکن بنگلادیش پر شاید بھارت نے دباؤ ڈالا ہے: وزیرِ خارجہ
وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بنگلہ دیش کی ٹیم پاکستان میں کھیلنے کیلئے تیار تھی لیکن لگتا ہے کہ بھارت نے دباؤ ڈالا ہے۔ سری لنکن کھلاڑیوں نے تاثر دیا کہ پاکستان میں ماحول سازگار تھا اور سری لنکن کرکٹرز نے سیکیورٹی انتظامات کی تعریف کی تھی لیکن بنگلادیش پر شاید بھارت نے دباؤ ڈالا ہے۔
وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی ملتان میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انکشاف کیا ہے کہ بھارت نے ایل او سی پر5مقامات سے باڑ کو کاٹا ہے جبکہ ایل او سی پر براہموس میزائل بھی نصب کئے ہیں، بھارت کے ان اقدامات کا مقصد کیا ہے؟ وزیرم خارجہ کا کہنا تھا کہ بھارت اس وقت تقسیم ہوچکا ہے،بھارتی سرکار ہندتوا سوچ پھیلانا چاہتی ہے،بابری مسجد کے فیصلے نے جذبات کو مجروح کیا،ان کاکہناتھا کہ پاکستان نے اس مسئلے پر بھرپور طریقے سے آوازاٹھائی ہے،سعودی ہم منصب سے کہا بھارتی متنازع بل کےخلاف آواز اٹھنی چاہیے،سعودی ہم منصب نے یقین دلایا کہ اوآئی سی کے فارم سے موثرآوازاٹھے گی۔

وزیرِ خارجہ نےکہاکہ دنیا بھارتی اقدامات کو دیکھ رہی ہے،سلامتی کونسل کو ایک اور خط لکھا ہے،چین نے مطالبہ کیا ہے کہ ایل او سی پرآبزرورز سلامتی کونسل کو بریفنگ دیں،چین نے مطالبہ کیا ہے کہ ایل او سی پرآبزرورزسلامتی کونسل کو بریفنگ دیں۔ شاہ محمود قریشی نے کہاکہ متنازعہ شہریت بل پر دنیا کے نامور جریدے بھارت پر تنقیدکررہے ہیں، بھارت کے ہر شہر میں احتجاج ہورہے ہیں،مقبوضہ کشمیر میں ظلم و بربریت کو چھپادیا گیا ،مقبوضہ کشمیر میں کمیونی کیشن بلیک آوَٹ ہے،بھارت میں کمیونی کیشن بلیک آوَٹ نہیں ہوسکتا،بھارت میں جو ہورہا ہے سب کے سامنے ہے،پاکستان ان حالات میں بھارت کے ساتھ مذاکرات تیار نہیں۔
شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت اس وقت تقسیم ہوچکا ہے،بھارتی سرکار ہندتوا سوچ پھیلانا چاہتی ہے،بابری مسجد کے فیصلے نے جذبات کو مجروح کیا،ان کاکہناتھا کہ پاکستان نے اس مسئلے پر بھرپور طریقے سے آوازاٹھائی ہے،سعودی ہم منصب سے کہا بھارتی متنازع بل کےخلاف آواز اٹھنی چاہیے،سعودی ہم منصب نے یقین دلایا کہ اوآئی سی کے فارم سے موثرآوازاٹھے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں