7سال سے کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کرنیوالے 21سال سے زائد عمر کے مجرم کو کم از کم 100افراد کے سامنے پھانسی دی جائے،مجوزہ بل 198

کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی پر سرعام پھانسی کا بل قومی اسمبلی میں آگیا 7سال سے کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کرنیوالے 21سال سے زائد عمر کے مجرم کو کم از کم 100افراد کے سامنے پھانسی دی جائے،مجوزہ بل

کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی پر سرعام پھانسی کا بل قومی اسمبلی میں آگیا
7سال سے کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کرنیوالے 21سال سے زائد عمر کے مجرم کو کم از کم 100افراد کے سامنے پھانسی دی جائے،مجوزہ بل
کم عمر بچوں کو زیادتی کا نشانہ بنانے پر سرعام پھانسی کا بل قومی اسمبلی میں آگیاتفصیل کے مطابق قائمہ کمیٹی کو بھجوائے گئے بل میں کہا گیا ہے کہ 7 سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ زیادتی کرنیو الے 21 سال سے زائد عمر کے مجرموں کو سرعام پھانسی دی جائے۔ پھانسی کے وقت کم از کم 100 افراد کا ہونا ضروری ہے۔
بل اقلیتی رکن جیمز اقبال نے قائمہ کمیٹی کو بھیجا۔بل کے متن میں کہا گیا ہے کہ 10 سال سے زائد بچوں کے ساتھ زیادتی عمر قید کی سزا دی جائے۔ ساتھ ہی ساتھ بل میں تجویز پیش کی گئی ہے کہ معذور افراد کیساتھ زیادتی کرنے والوں کو کم از کم 14 سال اور دو لاکھ روپے جرمانے کی سزا دی جائے ۔ مجوزہ بل قائمہ کمیٹی کو بھیج دیا گیا ہے ، قائمہ کمیٹی کی منظوری کے بعد بل کو قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا۔
پاکستان میں بچوں سے زیادتی کے 17 ہزار سے زائد واقعات پیش آئے۔قومی اسمبلی میں پیش کی گئی رپورٹ کے مطابق پاکستان بھر میں بچوں سے زیادتی کے 17862 کیس رپورٹ ہوئے۔ اعدادو شمار کے مطابق 10620 لڑکیوں کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا جبکہ7242 لڑکے جنسی زیادتی کا شکار بنے۔ تاہم اب ان واقعات پر مجروموں کی سزا کو بڑھانے کیلئے قومی اسمبلی میں مجوزہ بل پیش کر دیا گیا ہے۔
جو قائمہ کمیٹی کو منطوری کیلئے بھیج دیا گیا ہے۔ واضح رہے قائمہ کمیٹی کی منظور کی بعد بل کو قومی اسمبلی میں زیر بحث لایا جائے گا ۔ تاہم قومی اسمبلی سے منطوری کے بعد اس بل کو سینیٹ میں زیر بحث لایا جائے گا جس کے بعد یہ قانون کی شکل اخیتار کر جائے گا۔ تاہم اس بل کی منظوری کیلئے قومی اسمبلی اور سینیٹ کی منظوری ضروری ہے۔ اگر کوئی ایک بھی اس بل کو رد کر دیتا ہے تو یہ بل قانون کی شکل اختیار نہیں کر سکے گا۔

7سال سے کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کرنیوالے 21سال سے زائد عمر کے مجرم کو کم از کم 100افراد کے سامنے پھانسی دی جائے،مجوزہ بل

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں