نوازشریف کی شوگر ملز نے بجلی کے بل میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ وصولی چیلنج کردی 215

نوازشریف کی شوگر ملز نے بجلی کے بل میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ وصولی چیلنج کردی

سابق وزیر اعظم نواز شریف کی چوہدری شوگر ملز نے بجلی کے بلوں میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ بقایاجات کی وصولی ہائی کورٹ میں چیلنج کردی۔

سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خاندان کی ملکیت چوہدری شوگر ملز کے وکلا نے بجلی کے بل میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ سرچارج بقایا جات کی وصولی کو ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا ہے، درخواست چوہدری شوگر ملز کے ٹیکسٹائل ڈویژن کے شہباز حیدر کی جانب سے دائر کی گئی ہے اور اس میں وزارت پانی و بجلی، کامرس، واپڈا اور لیسکو کو فریق بنایا گیا ہے۔

درخواست گزار کا موقف ہے کہ چوہدری شوگر ملز کی پیداوار کا انحصار بجلی پر ہے، بجلی کا بل بڑھنے سے پیداواری اخراجات بھی بڑھ جاتے ہیں، لیسکو نے بجلی کے بلوں میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ کے نام پر بقایاجات بھی وصول کرنا شروع کر دیئے ہیں، اضافی بلوں کی وصولی آئین کے آرٹیکل 2اے، 4، 5، 6، 9، 14، 15، 18 اور 25 کی خلاف ورزی ہے۔ بجلی بلوں میں کوارٹر ٹیرف ایڈجسٹمنٹ بقایاجات کی وصولی کو غیر قانونی قرار دے کر کالعدم کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں